August 29, 2020 By Admin 0

سائنسدانوں نے رات کو مفت بجلی فراہم کرنے والا نیا اینٹی سولر پینل تیار کر لیا

سائنسدانوں نے رات کو مفت بجلی فراہم کرنے والا نیا اینٹی سولر پینل تیار کر لیا

سائنسدانوں نے ایسا اینٹی سولر پینل کا ماڈل تیار کر لیا ہے جو کہ تمام رات مفت بجلی فراہم کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے، اس سے قبل صرف دن کو ہی سورج کی روشنی کے ذریعے ایسا کرنا ممکن تھا۔

سولر پینل اس لیے کام کرتے ہیں کیونکہ وہ سورج کی شعاعوں کے مقابلے میں ٹھنڈے ہوتے ہیں اس لیے حرارت جذب کر کے اسے بجلی میں تبدیل کر دیتے ہیں۔

اینٹی سولر پینل اس سے بھی زیادہ ٹھنڈا ہو گا جس کی وجہ سے وہ زمین سے نکلنے والی حرارت کو جذب کر کے اسے بجلی میں تبدیل کر سکے گا۔

اس سے قبل بنائے جانے والے اینٹی سولر پینل دن کو پیدا ہونے والی بجلی کا صرف چوتھائی حصہ تیار کر سکتے تھے لیکن آپٹکس ایکسپریس میں شائع ہونے والی نئی تحقیق کے مطابق ایسے اینٹی سول پینل تیار کیے جا سکیں گے جو پرانے پینلز سے 120 فیصد زیادہ بجلی پیدا کر سکیں گے۔

یہ تحقیق کرنے والی سٹین فورڈ یونیورسٹی کے ریسرچرز کی ٹیم کا کہنا ہے انہوں نے تھرمو الیکٹرک جنریٹر کی صلاحیت بڑھا کر یہ نتائج حاصل کئے ہیں۔ انہوں نے ایسا میٹیریل استعمال کیا ہے جو کہ گرمی کو زیادہ جذب کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

ریسرچرز کے مطابق ایک مربع میٹر کا اینٹی سولر پینل 2.2 واٹ بجلی پیدا کر سکے گا جو گزشتہ اینٹی سولر پینل کے مقابلے میں 120 فیصد زیادہ مقدار ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ اگرچہ سیمولیشن کے ذریعے یہ ماڈل تیار کیا گیا ہے مگر اسے عملی شکل دینے کے لیے تمام میٹیریل موجود ہے جس کی وجہ سے اس قسم کے اینٹی سولر پینل باآسانی تیار ہو سکتے ہیں۔

ر یسرچرز کے مطابق دور دراز کے غیرترقی یافتہ علاقوں کو اس نئے اینٹی سولر پینل کے ذریعے قابل اعتماد بجلی فراہم کی جا سکے گی۔

سائنسدانوں نے رات کو مفت بجلی فراہم کرنے والا نیا اینٹی سولر پینل تیار کر لیا

Samsung Set To Launch Smartphone Assembly Plant In Pakistan