کراچی کے طلبہ نے ملک کا پہلا مائیکرو پراسیسر ڈیزائن کرلیا

پاکستان نے مائیکروپراسیسرز کی 500ارب ڈالر سے زائد کی گلوبل مارکیٹ میں اپنا مقام بنانے کے لیے پہلا قدم اٹھاتے ہوئے ملک کا پہلا مائیکرو پراسیسر ڈیزائن کرلیا ہے۔ گوگل کے اشتراک سے اوپن سورس ٹیکنالوجیز کو بروئے کارلاتے ہوئے 2 سسٹم آن چپ مائکرو پراسیسرز سوئیٹزرلینڈ میں واقع عالمی ادارے کے تشکیل کردہ اوپن

اب ایک دفعہ بیٹری چارج کرنے پرکتنے ہزارسال تک استعمال ہوگی ،توانائی بحران سے پریشان افرادکے لیے بڑی خبرآگئی

اب ایک دفعہ بیٹری چارج کرنے پرکتنے ہزارسال تک استعمال ہوگی ،توانائی بحران سے پریشان افرادکے لیے بڑی خبرآگئی

جیسا کہ آپ دوست جانتے ہیں کہ توانائی کے متبادل ذرائع اور پیداوار کو سٹور کرنے کی کھوج میں سائنسدان مگن رہتے ہیں، ایسی ہی ایک کھوج کے دوران سائنسدان ایک ایسی بیٹری بنانے میں کامیاب ہوگئے ہیں جو ایک بارچارج ہونے کے بعد 5 ہزار سال تک استعمال کی جاسکتی ہے۔یہ ڈائمنڈ بیٹری کیلیفورنیا کی ایک مشہورکمپنی نے اٹامک ویسٹ سے تیار کی ہے، اور اس کی تیاری میں ہیرے جیسے سخت ترین دھات کا استعمال کیا گیا ہے، اس بیٹری کو جوہری ری ایکٹروں کے تابکار مادے سے طاقت ملتی ہے، ہیرے جیسے دھات کے استعمال کی وجہ سے اس بیٹری میں سے انسانی جسم سے بھی کم تابکاری کااخراج ہوتا ہے۔

عمومی طور پر سولر پاور ایک بیٹری کو 15 سے 20 فیصد چارج کرتا ہے مگر اس بیٹری کی ایک اور خصوصیت یہ ہے کہ یہ سولر پاور پر 40 فیصد تک چارج ہوسکتی ہے، سائنسدان ابھی اس پر مزید دماغ لگارہے ہیں اور تحقیق کر رہے ہیں تاکہ اسے سولر پر ہی 90 فیصد تک چارج کیا جاسکے۔اس بیٹری کو تیار کرنے والے سائنسدانوں کے مطابق اس کے دو کامیاب لیبارٹری ٹیسٹ کیے گئے ہیں، ڈائمنڈ بیٹری آٹو میٹک طریقے سے اپنے آپ چارج ہوسکتی ہے، اور اس کے وولٹیج بھی عام بیٹریوں کے مقابلے میں بہتر ہوں گے۔اس بیٹری کے تمام تر ٹیسٹ مکمل ہوجانے کے بعد اس سال کے آخر تک اس کی کمرشل بنیادوں پر پروڈکشن شروع ہوجائے گی، حیرت انگیز بات یہ ہے کہ متعدد کمپنیوں نے اس بیٹری کے مارکیٹ میں آنے سے پہلے ہی اس کو خرید لیا ہے۔

ایک دفعہ بیٹری چارج

ہمیں امید ہے کہ ہمیشہ کی طرح آپکو یہ پوسٹ بھی پسند آئی ہو گی۔اگر آپکو یہ پوسٹ اچھی لگی ہے تو اسے اپنے دوستوں کی ساتھ ضرور شئیر کریں۔